یوم پاکستان پوری قوت سے منانا قومی جذبے کی سلامتی کا ضامن ہے۔ سابق صدرپاکستان فلاح پارٹی قاضی عتیق الرحمن

اسلام آباد () یوم پاکستان پوری قوت سے منانا قومی جذبے کی سلامتی کا ضامن ہے۔پریڈ کسی صورت ۔منسوخ نہیں ہونی چاہیے۔تمام سیاسی جماعتوں کو پاکستان کے نصب العین یعنی وطن کی غیر مشروط محبت کا سبق ازبر کرنا ہو گا۔آزادی کشمیر کے بغیر پاکستان کی تکمیل ممکن نہیں۔23 مارچ 1940 کے مقاصد حاصل کرنے کے لیے مقبوضہ کشمیر کے عوام کو آزادی دلانی ہو گی۔ان خیالات کا اظہار مقررین نے پاکستان فلاح پارٹی اور اتحاد اسلامی مقبوضہ کشمیر کے زیر اہتمام نیشنل پریس کلب اسلام آباد میں منعقدہ آزادی کشمیر و تکمیل پاکستان کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔کانفرنس کی صدارت پاکستان فلاح پارٹی کے سابق صدر قاضی عتیق الرحمن نے کی جبکہ مہمان خصوصی چیئرمین کشمیر کمیٹی شہریار خان آفریدی اور وفاقی وزیر علی محمد خان تھے.کانفرنس سے ممتاز حریت رہنما سید منظور گیلانی چیئرمین اتحاد اسلامی،عبدالحمید لون حریت رہنما،پیر سید نوید الحسن شاہ مشہدی،سجاد اکبر عباسی ایڈووکیٹ سابق صدر راولپنڈی بار ایسوسی ایشن،پاکستان فلاح پارٹی پنجاب کے صدر سید راشد علی گردیزی اور دیگر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان اسلام کے نام پر حاصل ہوا۔جب تک ملک میں اسلام کے قوانین نافذ نہیں ہوتے،سود کا خاتمہ نہیں ہوتا پاکستان کے عوام کو خوشحالی نہیں مل سکتی ۔آئی ایم ایف اسٹیٹ بینک کے ذریعے پاکستان کو اپنی کالونی بنانا چاہتا ہے۔حکومت اسٹیٹ بینک کو بے لگام ہونے سے بچائے۔ملک کی ترقی اور خوشحالی کے لیے اپوزیشن جماعتوں سے ڈائیلاگ شروع کیے جائیں۔کشمیر کے ایجنڈے پر ساری سیاسی جماعتوں کو متحد کیا جا سکتا ہے۔23 مارچ 1940 کو قوم نے قائد اعظم محمد علی جناح کی قیادت میں برطانیہ سے آزادی کی جد وجہد شروع کی تھی۔آج قوم 23 مارچ 2021 کو آئی ایم ایف سے آزادی حاصل کرنے کا مطالبہ کرتی ہے